باب خ

خاندانی منصوبہ بندی

سوال # 1:
کیا ہم خاندانی منصوبہ بندی کے لیے کوئی بیرونی شے استعمال کرسکتے ہیں؟
جواب:
جب کسی معقول وجہ سے میاں بیوی دونوں وقفہ رکھنا چاہیں تو پھر کوئی بھی مانع حمل چیز اندرونی یا بیرونی طور پر استعمال کرسکتے ہیں۔ ہاں البتہ مستقل طور پر نس بندی یعنی مرد یا عورت کو ہمیشہ کے لیے ناقابل تولید بنانا جائز نہیں ہے۔ مگر اس صورت میں کہ جب ماہر ڈاکٹر یہ فیصلہ کریں کہ اگر عورت کو حمل ٹھہر گیا تو اس کی موت واقع ہو جاۓ گی۔ واللہ العالم۔

ختنہ

سوال # 1:
میں مسلمان ہونے پر غور کر رہا ہوں۔ پیدائش کے وقت مجھے مختون نہیں کیا گیا تھا، تو کیا مسلمان ہونے کے لیے میرے لیے مختون ہونا لازمی (واجب) ہے؟ یا اس کی صرف تاکید ہے؟
جواب:
مجھے یہ معلوم کر کے خوشی ہوئی ہے کہ آپ مسلمان ہونے پر غور کر رہے ہیں۔ ارشاد قدرت ہے کہ:
وَالَّذِينَ جَاهَدُوا فِينَا لَنَهْدِيَنَّهُمْ سُبُلَنَا وَإِنَّ اللَّهَ لَمَعَ الْمُحْسِنِينَ (العنکبوت 69)
“جو لوگ حق و حقیقت کو تلاش کرنے کی کوشش کرتے ہیں تو ہم ان کو سیدھا راستہ دکھا دیتے ہیں۔”
آپ تحقیق و جستجو جاری رکھیں حق مل جاۓ گا انشاءاللہ۔
باقی رہا ختنہ کا مسئلہ تو یہ واجب ہے، اور اس میں کوئی پیچیدگی نہیں ہے۔ آپ خاموشی سے کسی بھی سرجن سے کرواسکتے ہیں کچھ دن میں ٹھیک ہو جائیں گے اور کسی کو کانوں کان خبر بھی نہ ہوگی انشاءاللہ۔

خمس

سوال # 1:
اگر ایک شخص غریب ہے تو کیا ہم اس کے بچوں کو سہم امام (ع) دے سکتے ہیں؟
جواب:
ہاں بے شک دے سکتے ہیں بشرطیکہ وہ غریب شخص عقیدۃ” مومن ہو۔
سوال # 2:
خمس میں سہم امام (ع) کو ہم کہاں استعمال کرسکتے ہیں؟
جواب:
ہر اس کار خیر میں صرف کر سکتے ہیں جہاں امام زمانہ (ع) کی رضامندی کا یقین ہو۔

خواتین

سوال # 1:
کیا ایک عورت کے لیے جماعت کرانا جائز ہے جس میں مرد بھی اس کی اقتدا کر رہے ہوں؟
جواب:
عورت عورتوں کو تو نماز پڑھا سکتی ہے مگر کسی مرد کے لیے عورت کی اقتداء میں نماز پڑھنا جائز نہیں ہے۔

سوال # 2:
کیا کسی لڑکی کے لیے کسی لڑکے کو یہ بتانا جائز ہے کہ وہ اسے پسند کرتی ہے؟ اگر جائز نہیں ہے اور وہ لڑکی پہلے ہی اس لڑکے کو یہ بات بتا چکی ہے، تو پھر وہ لڑکی کیا کرے؟
جواب:
اگر لڑکا اسلامی و ایمانی نقطۂ نگاہ سے اس لڑکی کا کفو ہے تو پھر اس حقیقت کے اظہار میں کوئی خاص قباحت نہیں ہے تاکہ اس کے نتیجے ميں دونوں رشتۂ ازدواج ميں منسلک ہو سکیں۔ واللہ العالم و العاصم۔

سوال # 3:
کیا خواتين کو معاشرتی، نجی يا تفريحی مقاصد کے ليے گاڑی چلانے کی اجازت ہے؟
جواب:
اگر شرعی پردہ کی پابندی کریں تو پھر چلا سکتی ہیں۔

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s